6

سافٹ ڈرنک کین میں یہ تصویر 8 برس میں اتاری گئی ہے!

لندن: اوپر کی تصویر کومعمولی نہ سمجھئے کیونکہ یہ بدلتے موسموں اور برسوں میں افق پر سورج کے طلوع وغروب کے راستوں کو ظاہر کرتی ہے۔ اس تصویر کو لینے میں 8 برس کا عرصہ لگا ہے جسے انسانی تاریخ میں سب سے لمبے ایکسپوژر والی تصویر قرار دیا جاسکتا ہے۔

اس میں آپ سورج کے 2953 راستے دیکھ سکتے ہیں جو آٹھ برسوں میں تبدیل ہوتے رہے ہیں۔ لیکن یہ ایک فائن آرٹ منصوبے کا حصہ بھی ہے جسے پوری دنیا میں سراہا جارہا ہے۔ یہ تصویر فنون کی طالبہ ریجینا والکنبورغ نے حاصل کی ہے جس کے مشروب کے ٹِن کو بطور پِن ہول کیمرہ استعمال کیا گیا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں