8

پاکستان سمیت دنیا بھر میں جیمینیڈ شہابِ ثاقب کا نظارہ

کراچی: پاکستان سمیت دنیا بھر میں شہابیوں کی بارش کا دلفریب نظارہ دیکھا گیا۔ یہ واقعہ ہرسال ماہ دسمبر کے 13 سے 14 تاریخ میں اپنے مقامی وقت کے تحت رونما ہوتا ہے جس میں ایک منٹ میں 100 سے 120 شہابئے ایک روشن لکیر چھوڑتے ہوئے زمین کی جانب لپکتے ہیں جنہیں ہم غیرسائنسی طور پر عرفِ عام میں تارہ ٹوٹنا کہتے ہیں۔

ہمارے نظامِ شمسی میں ایک طویل بیضوی مدار میں فیتھون 3200 نامی سیارچہ (اسٹرائیڈ) چکر کاٹ رہا ہے۔ ہر سال دسمبر میں یہ زمینی مدار کو کاٹتے ہوئے گزرتا ہے۔ اگرچہ ماہرین کی اکثریت اسے شہابیہ ہی مانتی ہے لیکن بعض ماہرین اسے دمدار ستارے اور شہابئے کے درمیان کی کوئی شے قرار دیا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں