18

حکومتی پیکچ کی بدولت 2.8 فیصد کی زرعی نمو حاصل ہونے کے امکانات

کراچی: وفاقی حکومت کی اعلان کردہ امدادی پیکچ کی بدولت 2.8 فیصد کی زرعی نمو حاصل ہونے کے امکانات پیدا ہوگئے ہیں۔

وفاقی خزانہ ڈویژن کی جاری کردہ تازہ ترین “ماہانہ اقتصادی اپ ڈیٹ،آؤٹ لک”رپورٹ کے تناظر میں توقع ہے کہ گنے اور چاول کی بہتر پیداوار، زرعی معیشت میں بہتری، کم پیداواری لاگت اور حکومت کے اعلان کردہ بروقت امدادی پیکچ کی بدولت زرعی شعبے کا 2.8فیصد کاہدف باآسانی حاصل ہوجائے گا۔

رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ ٹڈیوں کے حملوں، مون سون کی شدید بارشوں اور کووِڈ 19کی وجہ سے زرعی سپلائی چین میں درپیش رکاوٹ کی وجہ سے معیشت کو افراطِ زر کے دباؤکا سامنا ہے جس کے نتیجے میں اشیائے خوردونوش کی بڑھتی ہوئی درآمدی سرگرمیوں کی وجہ سے معیشت پر بوجھ پڑا ہے اور حکومت ضروری اشیاء کی بروقت فراہمی کو یقینی بناتے ہوئے قیمتوں پر قابو پانے کی کوششیں کررہی ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں